ہندوستان میں نوے(۹۰) فیصد مذبح خانے غیر مسلموں کےہیں

October 12, 2015
12Oct15_AU مذبح خانے

ہندوستان میں گائے کے ذبیحہ پر جھگڑے اور فسادات
Amr Ujala
شہر کی ترقی کے وزیر اعظم خاں کا کہنا ہے ملک میں جانوروں کے 80 سے 90 فیصد مذبح خانے غیر مسلموں کے ہیں. یہ زیادہ تر ہندوؤں کے ہیں. انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم مودی اگر گاؤركشا کے حامی ہیں تو انہیں بیف برآمد پر پابندی لگا دینا چاہئے.
انہوں نے الزام لگایا کہ بیف برآمد مودی کے راج میں ہی سب سے زیادہ بڑھا ہے. ایک چینل سے بات چیت کرتے ہوئے اعظم نے کہا کہ آج اس قوم کو غدار کہا جا رہا ہے جس کی ملک کے لئے اہم شراکت ہے. بہادر عبدالحمید سے لے کر اے پی جے عبدالکلام اسی قوم سے ہیں.

دادری کو لے کر اقوام متحدہ جانے پر صفائی

اعظم نے دادری میں نوجوان کے قتل کے بعد ملک میں اقلیتوں کو ہراساں کرنے کا الزام لگاتے ہوئے اقوام متحدہ جانے اور ملک کی پولیس، عدلیہ پر اعتماد نہ کرنے سے متعلق سوالات پر صفائی دی.اعظم نے کہا کہ، چھ دسمبر کو جب بابری مسجد ڈھائی گئی تھی، مظفر نگر میں جب فساد ہوا تھا، دادری میں جب بے گناہ نوجوان کے قتل کر دیا گیا، آخر تب یہ تمام کہاں تھے؟ انہوں نے کہا کہ ان کے یو این او جانے پر سوال اٹھایا جا رہا ہے لیکن مودی سے پوچھا جانا چاہئے کہ وہ کتنی بار یو این او گئے تھے؟ ملک کے وزیر اعظم چھ دسمبر، مظفر نگر، ملیانہ پر کچھ نہیں بولے.

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s